IELTS سننا ٹیسٹ پر ایک سرسری نظر

دورانیہ: 30 منٹ 

سننے کا ٹیسٹ IELTS تعلیمی ٹیسٹ اور IELTS عمومی تربیت ٹیسٹ دونوں کیلئے یکساں ہوتا ہے۔ چار ریکارڈنگز کے جواب میں آپ کو 40 سوالوں کے جوابات دینے کی ضرورت ہوگی۔ 

آپ چار ایسی ریکارڈنگز سنیں گے جو کچھ مقامی متکلمین کی خود کلامی اور مکالمے کا مرکب ہیں اور آپ ہر ریکارڈنگ کو صرف ایک بار سنیں گے۔ سننے کے ٹیسٹ کے ہر حصے کیلئے 10 سوالات ہوتے ہیں۔  

یہ سوالات آپ کی سمجھنے کی صلاحیت کی جانچ کرتے ہیں: 

  • مرکزی خیالات اور تفصیلی حقائق سے متعلق معلومات 

  • متکلمین کی رائے اور طرز فکر 

  • فرمودات کا مقصد 

  • خیالات کی نشوونما پر عمل کرنے کی صلاحیت۔ 

سننے والے حصے کی تفصیلات: 

ریکارڈنگ 1   روزمرہ کے معاشرتی سیاق میں دو افراد کے مابین گفتگو۔  

ریکارڈنگ 2   روزمرہ کے معاشرتی سیاق میں ایک خود کلامی، مثلاً مقامی سہولیات کے بارے میں ایک تقریر  

ریکارڈنگ 3   ایک تعلیمی یا تربیتی سیاق میں چار افراد کے درمیان گفتگو، جیسے یونیورسٹی ٹیوٹر اور ایک اسائنمنٹ پر تبادلہ خیال کرنے والا طالب علم۔  

ریکارڈنگ 4   کسی تعلیمی مضمون پر خود کلامی، جیسے ایک یونیورسٹی لیکچر 

کثیر الانتخاب

کثیر الانتخاب والے سوالات کا جواب ایک صحیح جواب، یا ایک سے زیادہ درست جوابات کے ساتھ دیا جاسکتا ہے۔ کتنے جوابات درکار ہیں یہ جاننے کیلئے سوال کو بہت غور سے پڑھیں۔  

کثیر الانتخاب والے سوال میں، جہاں آپ کو ایک صحیح جواب (A ، B یا C) منتخب کرنا ہوگا، آپ کو دیا جائے گا: 

  • ایک سوال جس کے بعد تین ممکنہ جوابات ہوں گے 

  • ایک جملے کے آغاز اور اس کے بعد جملہ کو پورا کرنے کے تین طریقے۔ 

کثیر الانتخاب والے سوال میں، جہاں آپ کو ایک سے زیادہ درست جوابات کا انتخاب کرنے کی ضرورت ہوتی ہے، آپ کو ممکنہ جوابات کی ایک لمبی فہرست دی جائے گی اور بتایا جائے گا کہ آپ کو ایک سے زیادہ جوابات کا انتخاب کرنا ہوگا۔  

کثیر الانتخاب سوالات کو وسیع مہارتوں کی جانچ کرنے کیلئے استعمال کیا جاتا ہے۔ آپ کو مخصوص نکات کی تفصیلی تفہیم یا سماعتی تحریر کے اہم نکات کو مجموعی طور پر سمجھنے کی ضرورت ہوگی۔

میلان کرنا

آپ کو سننے والے آڈیو میں جو کچھ سنائی دے اس کے آئٹم کی ایک نمبر شدہ فہرست کو سوالیہ پرچے پر موجود کچھ اختیارات سے میلان کرنے کی ضرورت ہوتی ہے۔ اختیارات کے کچھ سیٹ بعض قسم کی کسوٹیاں ہو سکتی ہیں۔ 

میلان میں تفصیل سے سماعت کی مہارت کا اندازہ لگایا جاتا ہے اور یہ معلوم کیا جاتا ہے کہ کیا آپ روزمرہ کے موضوع پر گفتگو میں دی گئی معلومات کو سمجھ سکتے ہیں، جیسے کہ مختلف قسم کے ہوٹل یا گیسٹ ہاؤس رہائش کی نشاندہی کرنا۔ اس میں آپ کے دو افراد کے مابین گفتگو کو سمجھنے کی صلاحیت کا بھی جائزہ لیا جاتا ہے۔ سننے کے متن میں موجود حقائق کے مابین تعلقات اور رابطوں کو پہچاننے کی آپ کی صلاحیت کا اندازہ کرنے کیلئے بھی اس کا استعمال کیا جاسکتا ہے۔ 

منصوبہ، نقشہ، خاکہ، لیبلنگ

آپ کو کسی پلان پر (جیسے کسی عمارت کا)، نقشے پر (جیسے کسی شہر کے کسی حصے کا) یا خاکہ پر (جیسے ساز و سامان کے ایک حصے کا) لیبل مکمل کرنے کی ضرورت ہوگی۔ آپ عام طور پر سوالیہ پرچے کی فہرست سے اپنے جوابات منتخب کرسکتے ہیں۔ 

میلان والا یہ ٹاسک آپ کی سمجھنے کی صلاحیت کا اندازہ کرتا ہے، مثال کے طور پر، کسی جگہ کی تفصیل، اور اس کو تصویری منظر سے مربوط کرنے کی صلاحیت۔ اس میں زبان کے اظہار کی ہدایت پر عمل کرنے کے قابل ہونا شامل ہوسکتا ہے (جیسے سیدھے ہو جائيں/بائیں مڑیں/پیچھے مڑیں)۔ 

فارم، نوٹ، جدول، فلو چارٹ، خلاصہ کی تکمیل

اس تکمیل کی مشق میں، آپ کو جزء کے خاکہ یا تمام سننے کے متن کی خالی جگہوں کو پُر کرنا ہوگا۔ خاکے کے اندر تحریر کے مرکزی خیالات/حقائق پر توجہ دی جائے گی۔ یہ ہو سکتا ہے: 

  1. ایک فارم: حقائق کی تفصیلات کو ریکارڈ کرنے کیلئے جیسے نام، پتہ، ٹیلیفون نمبر 

  2. نوٹ کا ایک مجموعہ: وہ لے آوٹ کا استعمال کرکے معلومات کا خلاصہ بیان کرتے ہیں یہ بتانے کیلئے کہ مختلف آئٹم ایک دوسرے سے کس طرح منسلک ہوتے ہیں 

  3. ایک جدول: ان معلومات کا خلاصہ کرنے کیلئے استعمال کیا جاتا ہے جن کا تعلق واضح زمرے سے ہے - جیسے۔ جگہ/ وقت/قیمت، 

  4. ایک فلو چارٹ: ایک عمل کا خلاصہ کرنے کیلئے استعمال کیا جاتا ہے جس میں واضح مراحل ہوتے ہیں، پروسیس کی ایسی سمت کے ساتھ جو تیر کے ذریعہ دکھائے جاتے ہیں۔ 

آپ گمشدہ الفاظ کو ان میں سے کسی ایک طرح سے منتخب کریں گے: 

  • سوالیہ پرچے میں پیش کردہ فہرست سے 

  • ریکارڈنگ سے 

آپ کو ہدایات میں بیان کردہ لفظ کی حد کا خیال رکھنا چاہیے اور ریکارڈنگ سے سننے والے عین الفاظ کا استعمال کرنا چاہیے۔ 

آپ کو ہدایات کو بہت غور سے پڑھنا چاہیے کیونکہ ان الفاظ یا نمبروں کی تعداد مختلف ہوسکتی ہے جن کا آپ استعمال کرنا چاہیے۔ ۜایک لفظ کی حد دی جاتی ہے، مثال کے طور پر، ’دو لفظوں سے زیادہ نہیں اور/یا ایک نمبر سے زیادہ نہیں‘۔ اگر آپ لفظ حد سے زیادہ استعمال کرتے ہیں تو، آپ کے جواب کو غلط کے طور پر نشان زد کیا جائے گا لہذا ہر سوال کلئے لفظ کی حد کو احتیاط سے چیک کریں۔ مخفف الفاظ کی جانچ نہیں کی جاسکتی ہے، جیسے۔ ‘don’t ‘۔ ہائفن والے الفاظ کو ایک لفظ شمار کیا جاتا ہے، جیسے ’پولس-مین‘ 

خالی جگہ کو مکمل کرنے کے اس ٹاسک میں ان اہم نکات پر توجہ مرکوز کی جاتی ہے جو سننے والا اس نوعیت کی صورتحال میں قدرتی طور پر ریکارڈ کرتا ہے۔ 

جملہ مکمل کرنا

اس جملہ مکمل کرنے کے کام میں، آپ کو کچھ جملے پڑھنے کی ضرورت ہوتی ہے جس میں سے کلیدی معلومات کا خلاصہ کرنا ہوتا ہے: 

  • تمام سماعتی متن

  • اس کے ایک حصے سے۔  

اس کے بعد آپ سماعتی تحریر کی معلومات کا استعمال کرتے ہوئے ہر جملے میں ایک خلا کو پر کریں گے۔ ایک لفظ کی حد دی جاتی ہے، مثال کے طور پر، ’ایک لفظ سے زیادہ نہیں اور/یا ایک نمبر سے زیادہ نہیں‘۔ 

آپ کو ہدایات کو بہت غور سے پڑھنا چاہیے کیونکہ ان الفاظ یا نمبروں کی تعداد مختلف ہوسکتی ہے جن کا آپ استعمال کرنا چاہیے۔ ۜایک لفظ کی حد دی جاتی ہے، مثال کے طور پر، ’دو لفظوں سے زیادہ نہیں اور/یا ایک نمبر سے زیادہ نہیں‘۔ اگر آپ لفظ حد سے زیادہ استعمال کرتے ہیں تو، آپ کے جواب کو غلط کے طور پر نشان زد کیا جائے گا لہذا ہر سوال کلئے لفظ کی حد کو احتیاط سے چیک کریں۔ مخفف الفاظ کی جانچ نہیں کی جاسکتی ہے، جیسے۔ ‘don’t ‘۔ ہائفن والے الفاظ کو ایک لفظ شمار کیا جاتا ہے، جیسے ’پولس-مین‘ 

جملہ مکمل کرنا میں سماعتی تحریر کے اندر کلیدی معلومات کی شناخت کرنے کی آپ کی اہلیت پر توجہ مرکوز کی جاتی ہے۔ آپ کو عملی تعلقات کو سمجھنا چاہیے جیسے سبب اور اثر۔ 

مختصر جواب والے سوالات

مختصر جواب والی قسم کے سوال میں، آپ کو ایک سوال پڑھنے کی ضرورت ہوتی ہے اور پھر سننے کے متن سے معلومات کا استعمال کرتے ہوئے مختصر جواب لکھنے کی ضرورت ہوتی ہے۔ بعض اوقات ٹیسٹ دینے والوں کو ایک سوال دیا جاتا ہے جس میں ان سے دو یا تین نکات کی فہرست تیار کرنے کو کہا جاتا ہے۔ 

ۜایک لفظ کی حد دی جاتی ہے، مثال کے طور پر، ’دو لفظوں سے زیادہ نہیں اور/یا ایک نمبر سے زیادہ نہیں‘۔ اگر آپ لفظ حد سے زیادہ استعمال کرتے ہیں تو، آپ کے جواب کو غلط کے طور پر نشان زد کیا جائے گا لہذا ہر سوال کلئے لفظ کی حد کو احتیاط سے چیک کریں۔ مخفف الفاظ کی جانچ نہیں کی جاسکتی ہے، جیسے۔ ‘don’t ‘۔ ہائفن والے الفاظ کو ایک لفظ شمار کیا جاتا ہے، جیسے ’پولس-مین‘ 

مختصر جواب کے اندر سننے کے متن میں موجود ٹھوس حقائق جیسے مقامات، قیمتوں یا اوقات کو سننے کی صلاحیت پر توجہ مرکوز کی جاتی ہے۔